دنیا کا سب سے خوبصورت پودا “محبت” کا پودا ہوتا ہے۔۔ جو زمین میں نہیں دلوں میں اگتا ہے۔۔ اور کچھ ایسے بھی بے رحم ہوتے ہیں جو اس پوشیدہ اور سب سے خوبصورت پودے کو بھی اپنے پیروں تلے روند ڈالتے ہیں۔۔
وہ یہ کہتے ہوئے رونے لگ گیا ۔۔۔۔
اچھا ابھی بس کرو ایسے روتے نہیں پاگل ہوکیا۔۔
محبت دو سے شروع ہوکے دو ہی پہ ختم ہوتی ہے۔۔ نہ ہی محبت جمع ہوسکتی ہے۔۔ نہ ہی تفریق کی جاسکتی ہے۔۔ اور نہ ہی تقسیم۔۔ کیونکہ محبت ٹوٹ جاتی ہے۔۔۔ اور تمہاری محبت میں بھی ایک تیسرا فریق شامل ہوگیا تھا ۔۔ اس لیے اس نے تمہیں چھوڑ دیا۔۔۔
ہاں صحیح کہہ رہے ہو۔۔ محبتوں کے بیچ جب دنیا شامل ہوجاتی ہے نا تو محبت کی کوئی ویلیو ہی نہیں رہتی۔۔ لوگ خود بک جاتے ہیں۔۔اور اپنا سب سے قیمتی خزانہ ہمیشہ کے لیے کھو دیتے ہیں۔۔ کیونکہ سچی اور خالص محبت ایک بار ہی ملتی ہے۔۔ بس کوئی کوئی ہی مخلص ہوتا ہے۔۔ اور لوگ پھر بھی ان کو چھوڑ کے چلے جاتے ییں۔۔ لیکن جب خود کو ٹھوکر لگتی ہے نا تو وہ لوٹ آتے ہیں۔۔ لیکن وہ بھول جاتے ہیں کہ وہ لوگ مخلص تھے۔۔۔ بے وقوف نہیں۔۔۔
اور یہ کہہ کہ اس نے اپنے آنسوں صاف کیے ذبردستی مسکرایا۔۔۔ اور اٹھ کہ جانے لگا۔۔ کیونکہ اس کو لگ رہا تھا کہ جیسے صبح کو گیا ہوا پرندہ شام میں ضرور لوٹتا ہے۔۔ تو اور وہ بھی ضرور لوٹیگی۔۔ لیکن تب تک شاید وہ اس کے دل سے اتر چکی ہوگی۔

ازقلم 📝 فائزہ ھاشم۔۔۔۔۔

9 thoughts on “

  1. ماشاء اللہ، زرخیز ذہن ہے، محبت کی اچھی تعریف اور مکالمے میں اچھا تسلسل، گڈ لک 😊

    Like

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google photo

You are commenting using your Google account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

Connecting to %s

Create your website with WordPress.com
Get started
%d bloggers like this: